غیبت کبیرہ گناہ

غیبت کبیرہ گناہ

سرکار کائنات صلی اللہ تعالیٰ علیہ وآلہ وسلم کا فرمان عبرت نشان ہے :

معراج کی رات میں ایسی عورتوں کو اور مردوں کے پاس سے گزرا جو اپنی چپاتیوں کے ساتھ لٹک رہے تھے، تو میں نے پوچھا :اے جبرائیل! یہ کون لوگ ہیں؟ عرض کی:یہ منہ پر عیب لگانے والے اور پیٹھ پیچھے برائی کرنے والے ہیں اور انکے متعلق اللہ عزوجل ارشاد فرماتا ہے:

ترجمہ

خرابی ہے اسکے لئے جو لوگوں کے منہ پر عیب کرے، پیٹھ پیچھے بدی کرے۔

غیبت کبیرہ گناہ جہنم میں لے جانے والا کام ہے اس سے بچیں۔